HomePoetryکربلا   کی  ہے  روایت   تو  اٹھو  سب...


کربلا   کی  ہے  روایت   تو  اٹھو  سب…

سب کو تھوڑی سی محبت  آج بھی ہے
کوفیوں کو  پھر  شکایت  آج   بھی   ہے

زہر کے  ساغر  پلانے جاتے  ہیں یوں
شہر کوفہ   کی   روایت  آج  بھی  ہے_

ظلم  حد  سے  ہی  بڑھا  جاۓ  نگر  میں
کیوں ستم  گر  کی عنایت  آج  بھی ہے

میں  کٹا  دوں اپنے  بازو  شوق  سے  گر
آب دریا  میں عقیدت  آج بھی ہے

کربلا   کی  ہے  روایت   تو  اٹھو  سب
بوجھ  دنیا  میں  شریعت آج بھی  ہے

تیر  حرمل  ہے جگر  میں میرے  آقا
آب  لانے  کی تو نیت  آج بھی ہے

آنکھ   پانی  سے  جو  ہے   لبریز   امبر
آرزوؤں  کی   شہادت  آج  بھی  ہے

   کلام : ڈاکٹر شہباز امبر رانجھا

RELATED ARTICLES
- Advertisment -